سنا ہے محبت کا پیاسا ہے تو – قتیل شفائی


سنا ہے محبت کا پیاسا ہے تو – قتیل شفائی by QateelShifai

سنا ہے محبت کا پیاسا ہے تو
محبت کھڑی ہے تیرے سامنے
خیالوں کے پیچھے نہ بھاگ اے صنم
یہ مانا حسیں تجھ سا کوئی نہیں ہے
تجھے چاہتا ہے زمانہ
ذرا اس کی چاہت پہ بھی غور کرلے
تجھے زندگی جس نے جانا
خریدار جو ہے تیرے پیا رکی
وہ دولت کھڑی ہے تیرے سامنے
محبت کھڑی ہے تیرے سامنے
جہاں مسکرائیں تیری آرزوئیں
وی جنت ہے میری جوانی
یہ دیتی ہے ٹھنڈک نگاہوں کو پھر بھی
قیامت ہے میری جوانی
قیامت الگ چیز کوئی نہیں
قیامت کھڑی ہے تیرے سامنے
محبت کھڑی ہے تیرے سامنے
اجالے ترسیں ہیں میری جبیں سے
مزا مجھ میں ہے چاندنی کا
میرے گیسوؤں کی گھٹاؤں میں تجھ کو
ملے گا سکوں زندگی کا
کوئی اور تجھ کو نہ جو دے سکے
وہ راحت کھڑی ہے تیرے سامنے
خیالوں کے پیچھے نہ بھاگ اے صنم
حقیقت کھڑی ہے تیرے سامنے
فلم: آدمی ۔۔موسیقار : ایم اشرف
گلوکارہ : ناہید اختر ۔۔ شاعر: قتیل شفائی

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *